چین میں دنیا کی ممتاز میڈیکل یونیورسٹی کانیا مرکز پاکستانی سائنسدان کے نام سے منسوب

چین میں دنیا کی ممتاز میڈیکل یونیورسٹی کانیا مرکز پاکستانی سائنسدان کے نام سے منسوب
بیجنگ(کرئیرکاروان) جامعہ کراچی میں واقع بین الاقوامی مرکز برائے کیمیائی و حیاتیاتی علوم (آئی سی سی بی ایس) کے ایک سینیئر آفیشل نے اعلان کیا ہے کہ چین میں دنیا کی ممتاز ترین میڈیکل یونیورسٹیوں میں سے ایک کے نئے مرکز کا نام ’پروفیسر عطا الرحمان ون بیلٹ ون روڈ ٹی سی ایم ریسرچ سینٹر‘ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق اکتوبر میں اس مرکز کا باقاعدہ افتتاح کیا جائے گا جس کا نام ’پروفیسر عطا الرحمان ون بیلٹ ون روڈ ٹی سی ایم ریسرچ سینٹر‘ رکھا گیا ہے۔
مرکز کا افتتاح ’پانچویں بایو ٹی سی ایم انٹرنیشنل کانفرنس‘ کے موقع پر کیا جائے گا۔ یہ کانفرنس 23 سے 25 اکتوبر کو منعقد کی جائے گی۔۔ اعلامیے کے مطابق اس سلسلے میں وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری کو بطور مہمانِ خصوصی تقریب میں مدعو کیا گیا ہے۔
واضح رہے کہ اس سے پہلے ملائیشیا میں بھی ڈاکٹر عطاالرحمان کے نام سے ایک سائنسی مرکز قائم کیا گیا ہے، ملائیشیا کی سب سے بڑی یونیورسٹی، یونیورسٹی ٹیکنالوجی مارا میں ’عطا الرحمان انسٹی ٹیوٹ آف نیچرل پراڈکٹ ڈسکوری‘کے نام سے یہ ادارہ بنایا گیا ہے۔
خیال رہے کہ پروفیسر عطا الرحمن وزیراعظم پاکستان کی قائم کردہ ٹاسک فورس برائے سائنس اور ٹیکنالوجی کے چیئرمین، سائنس اور ٹیکنالوجی پر مبنی معیشت کے قیام کے لیے ٹاسک فورس کے وائس چیئرمین اور ٹاسک فورس برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شریک سربراہ کے عہدوں پر فائز ہیں جبکہ ماضی میں پروفیسر عطاالرحمان چیئرمین اعلیٰ تعلیمی کمیشن پاکستان اور وفاقی وزیر برائے سائنس اور ٹیکنالوجی کے طور پر بھی خدمات انجام دے چکے ہیں۔
پروفیسر عطا الرحمن نے نیچرل پراڈکٹ کیمسٹری کے شعبے میں گراں قدر خدمات انجام دی ہیں اس ضمن میں ان کی 1142 سے زائد بین الاقوامی اشاعتیں ہیں۔پروفیسر عطا الرحمن کو نہ صرف بین الاقوامی ایوارڈ حاصل ہوئے ہیں بلکہ حکومتِ پاکستان کی جانب سے انھیں سائنسی میدان مین ملک و قوم کی خدمات کے صلے میں تمغہِ امتیاز، ستارہِ امتیاز، ہلالِ امتیاز اور نشانِ امتیاز سے نوازا جا چکا ہے۔