انٹر کامرس کے بدترین نتائج کا اعلان

کراچی(نمائندہ کریئر کاروان) اعلیٰ ثانوی تعلیمی بورڈ کراچی نے انٹرمیڈیٹ سال دوم کامرس ریگولر کے سالانہ امتحانات برائے 2018ءکے نتائج کا اعلان کردیا ہے۔ناظم امتحانات عظیم احمد نے نتائج کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ کامرس ریگولر کے سالانہ امتحانات برائے 2018ءمیں 39925امیدواروں نے رجسٹریشن حاصل کی جبکہ 39192 امیدوار امتحانات میں شریک ہوئے جس میں سے 12183 امیدوار کامیاب قرار پائے اس طرح کامیاب طلبہ کا تناسب 31.09فیصد رہا۔کامیاب ہونے والے طلباءمیں سے 109 اے ون گریڈ، 1039 اے گریڈ، 2569 بی گریڈ، 4091سی گریڈ، 3907 ڈی گریڈ اور 468امیدوار ای گریڈ میں کامیاب قرار پائے۔افسوسناک امر یہ ہے کہ اس سال بھی کوئی سرکاری کالج پوزیشن حاصل کرنے میں ناکام رہا اور تمام پوزیشنز نجی اداروں کے حصہ میں آئیں۔ 
چیئرمین انٹربورڈ پروفیسر انعام احمد نے نتائج کا اعلان کرتے ہوئے بتایا کہ کامرس ریگولر کے سالانہ امتحانات برائے 2018ءمیں تابانیز کالج نارتھ ناظم آباد کیمپس کے حسن بن سلیم ولد محمد سلیم رول نمبر 613522 نے 1100میں سے 957 نمبرز اے ون گریڈ حاصل کرتے ہوئے پہلی پوزیشن جبکہ تابانیز کالج کے ہی اسد علی ولد محمد حسین رول نمبر 605091 نے 953 نمبرز اے ون گریڈ حاصل کرکے دوسری پوزیشن حاصل کی، تیسری پوزیشن مشترکہ طور پر کامکس کالج کی طالبہ زلیخا عدنان بنت محمد عدنان نارا رول نمبر 623248 اور میٹروپولس انٹرمیڈیٹ کالج فار گرلز کی بشریٰ بنت محمد ناصر ادمانی رول نمبر 621878 نے 938نمبرز اے ون گریڈ نے حاصل کی۔