دو سالہ بی اے اور بی ایس سی پروگرام بند کرنے کا فیصلہ

دو سالہ بی اے اور بی ایس سی پروگرام بند کرنے کا فیصلہ 
اسلام آباد (کرئیرکاروان) محکمہ تعلیم پنجاب نے رواں سال اگست سےدو سالہ بی اے اور بی ایس سی پروگرام کی ڈگری بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔میڈیا رپورٹس میں  محکمہ ہائیر ایجوکیشن نے مذکورہ ڈگریاں بند کرنے کا نوٹیفیکیشن جاری کرتے ہوئے تعلیمی اداروں کو ہدایت کی ہے کہ دو سالہ بیچلرز آف آرٹس اور بیچلرز آف سائنس کی جگہ نئی اور جدید دو سالہ ایسوسی ایٹ ڈگری کا آغاز ہو گا۔ ایسو سی ایٹ ڈگری میں طلباء جنرل مضامین کی جگہ اسپیشلائزڈ مضامین اور مختلف مضامین پر مشتمل بی اے کے بجائے اسپیشلائزڈ سبجیکٹ پر ایسوسی ایٹ ڈگری حاصل کریں گے۔ایسو سی ایٹ ڈگری کے تحت طلباء کو نمبرز کے حصول کے لیے پریکٹیکل ٹریننگ حاصل  کرنا ہو گی اور کوارڈی نیٹرز بھی رکھنا ہوں گے۔ پہلے سال بی اے ، بی ایس سی کے سبجیکٹ کو ایسوسی ایٹ ڈگری میں شامل کیا جائے گا ۔ آئندہ سال نئے جدید اسپیشلائزڈ مضامین نصاب کا حصہ بنائے جائیں گے۔نوٹیفیکشن کے مطابق 31 دسمبر 2018ء سے پہلے بی اے، بی ایس سی میں رجسٹریشن کرانے والے طلباء 31 دسمبر 2020ء تک اپنی ڈگریاں مکمل کر سکتے ہیں اور انہیں ایسوسی ایٹ ڈگریاں جاری کی جائیں گی۔ ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے کہا تھا کہ 2020سے بی اے، بی ایس سی، ایم اے، ایم ایس سی سمیت تمام 2سالہ ڈگریاں مکمل طور پہ بند کر دی جائیں گی۔ ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے کہا ہے کہ 2سالہ ڈگری رکھنے والے افراد 4سالہ آنرز پروگرام میں داخلہ لینے کے اہل ہوں گے اور وہ 18کریڈٹ آور کے کورسز پڑھنے کے بعد آنرز میں داخلہ لے سکیں گے۔ 2سالہ ڈگری رکھنے والے افراد کو 18کریڈٹ آور کے کورسز پڑھنے کے بعدچار  سالہ آنرز پروگرام کے  5ویں سمیسٹر میں داخلہ ملے گا ۔ یاد رہے کہ ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے 2016میں 2سالہ ڈگری بند کرنے کا فیصلہ کیا تھا تاہم اب تک اس پر عمل کروانے میں قاصررہا ہے لیکن اب ہائیر ایجوکیشن کمیشن کی جانب حتمی طور پر بی اے، بی ایس سی، ایم اے ، ایم ایس سی سمیت تمام دو سالہ ڈگریاں بند کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ 2سالہ ڈگری پروگرام بند کرنے کے بعد کالجز اور یونیورسٹیوں میں 2سالہ ایسوسی ایٹ پروگرام شروع کیا جائے گا اور طلباء انٹر میڈیٹ کے بعد 2سالہ ایسوسی ایٹ پروگرام میں داخلہ لے سکیں گے۔