بچوں کو ذہنی دباؤ سے کیسے بچائیں؟

بچوں کو ذہنی دباؤ سے کیسے بچائیں؟
والدین امتحان کے دنوں میں اپنے بچوں کی عادات  اور ان میں ہونے والی تبدیلیوں پر خاص نظر رکھیں، کہ کہیں آپ کا بچہ امتحانات کی وجہ سے دباؤ کا شکار تو نہیں؟ اگر آپ کا بچہ ٹھیک سے سو نہیں رہا، اسے بھوک نہیں لگ رہی یا اس کی سوچ منفی ہوتی جارہی تو ان تمام علامات کا مطلب یہی ہے کہ وہ امتحانی دباؤ کا شکار ہے اور اس کی وجہ سے بچوں ڈپریشن کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔ سر درد اور پیٹ میں درد بھی امتحانی دباؤ کی علامات میں سے ایک ہیں اگر آپ کو اپنے بچے میں امتحانات کے دنوں میں یہ تمام علامات ظاہر ہوں تو فوری طور پر اپنے بچے سے بات کیجیے اور اسے اعتماد دیں کہ اس کی تیاری بھرپور ہے تاکہ اس کی سوچ منفی نہ ہو۔ اسی طرح اگر آپ کے بچوں میں امتحان کے دنوں میں وزن میں کمی، چڑچڑا پن، بھوک نہ لگنا یہ اس طرح کی کوئی بھی کیفیت پائی جائے تو گھبرانے کی ضرورت نہیں بلکہ اپنے بچوں کو اس مسئلے کے حل تلاش کریں۔