وائس چانسلر فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی کی قیادت میں آگاہی واک کا انعقاد

لاہور(نمائندہ خصوصی کریئر کاروان) پروفیسر محمود علی ملک نے کہا ہے کہ ذیابیطس کسی بھی فرد کو زندگی کے کسی بھی حصے میں متاثر کرسکتی ہے ۔دنیا بھر میں ہر 4 میں سے 1 شخص ذیابیطس کے مرض کا شکار ہورہا ہے ۔فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی لاہور میں ذیابیطس کے عالمی دن کے حوالے سے آگاہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے پروفیسر محمود علی ملک نے کہا کہ ذیابیطس سے بچاؤ کے لئے طرزندگی میں تبدیلی لانا ضروری ہے۔
فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر عامر زمان نے کہا کہ پیاس،بھوک اورپیشاپ کی زیادتی ذیابیطس کی ابتدائی علامات میں شامل ہیں اورمرض کی شدت بڑھنے سے مریض کے پاؤں سن ہوجاتے ہیں اوران میں درد کا احساس کم ہونے لگتا ہے ۔جس کی وجہ سے مریض کے پاؤں میں زخم کسی بھی پریشانی کا سبب بن سکتے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ ذیابیطس کے پھیلنے کی بڑی وجہ موٹاپا،مرغن غذائیں اورسہل پسندزندگی ہے ۔سیمینار سے پروفیسر بلقیس شبیر،پروفیسر روبینہ ،پروفیسر اصغر نقی،پروفیسر خالد جاویدنے مرض کی پیچیدگیوں کو روکنے کیلئے اختیاطی تدابیر سے اورجدید طریقہ علاج سے آگاہ کیا ۔بعدازاں وائس چانسلر فاطمہ یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر عامر زمان کی قیادت میں آگاہی واک کا اہتمام کیا گیا۔