سیکولر افراد کی آبادی میں تیزی سے اضافہ

دنیا میں بے مذہب / سیکولر افراد کی آبادی میں تیزی سے اضافہ، سب سے زیادہ کس ملک کے شہری بے مذہب ہیں؟ 
لاہور (کرئیر کاروان) دنیا میں بے مذہب افراد کی آبادی میں تیزی سے اضافہ ہوتا جارہا ہے جس کی بڑی وجہ مغربی ممالک میں لوگوں کی مذہب سے بیزاری ہے۔ ایک اندازے کے مطابق اس وقت دنیا کی مجموعی آبادی کا 16 فیصد سیکولر لوگوں پر مشتمل ہے جبکہ نیدر لینڈ میں آبادی کے تناسب سے سب سے زیادہ بے مذہب افراد موجود ہیں۔ وکی پیڈیا کے مطابق اس وقت دنیا میں سب سے بڑا مذہب عیسائیت ہے جس کے پیروکاروں کی تعداد لگ بھگ 2 ارب 40 کروڑ ہے اور یہ مجموعی انسانی آبادی کا 33 فیصد ہیں۔ اسلام دنیا کا دوسرا بڑا مذہب ہے جسے ایک ارب 80 کروڑ لوگ مانتے ہیں اور یہ دنیا کی آبادی کا 16 فیصد ہیں۔ دنیا میں ایک ارب 20 کروڑ افراد بے مذہب/ سکیولر/ اگنوسٹک/ اتھیسٹ ہیں جو دنیا کی مجموعی آبادی کا 16 فیصد بنتے ہیں۔
ورلڈ انڈیکس کے مطابق سکینڈی نیوین ممالک کے لوگ سب سے زیادہ بے مذہب ہیں ۔ آبادی کے تناسب سے بے مذہب افراد کا سب سے بڑا ملک نیدر لینڈز/ہالینڈ ہے جس کی مجموعی آبادی کا 48 فیصد حصہ بے مذہب افراد پر مشتمل ہے۔ ناروے میں 43فیصد، سویڈن میں 42فیصد اور ڈنمارک میں 38 فیصد آبادی بے مذہب افراد پر مشتمل ہے۔ سپین 30، فرانس 28، جرمنی 24 ، برطانیہ 23 ، فن لینڈ 21 ، آسٹریا 16 اور پرتگال میں 15 فیصد لوگ خود کو بے مذہب یا سیکولر کہتے ہیں۔