صوبائی وزیر تعلیم کا بیان

لاہور(نمائندہ کریئر کاروان)موجودہ نظام کی خامیوں پر بات کرتے ہوئے وبائی وزیر برائے سکول ایجوکیشن ڈاکٹر مراد راس کا کہنا ہے کہ پنجاب میں استاد بننے کے لیے اب لائسنس لینا لازمی ہو گا، بغیر لائسنس کوئی بھی استاد سکول میں پڑھا نہیں سکے گا۔نجی چینل کے مطابق ڈاکٹر مراد راس کا کہنا تھا کہ اس مقصد کے لیے نئی پالیسی لائی جائے گی۔صوبائی وزیر کے مطابق لائسنس کے تحت جس استاد کی جتنی تعلیمی قابلیت ہو گی، وہ اس کے مطابق ہی کسی کلاس کو پڑھا سکے گا۔ڈاکٹر مراد راس کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر اور وکیل کا لائسنس ہو سکتا ہے تو استاد کا کیوں نہیں؟ ٹیچر لائسنس لیتے ہوئے بتائے گا کہ وہ کیوں استاد بننے کا اہل ہے؟
صوبائی وزیر برائے سکول ایجوکیشن نے کلرکس کی بھی کلاس لے ڈالی۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر کوئی کلرک رشوت لے کر کسی استاد کی فائل آگے کرتا پکڑا گیا تو وہ اسے نہیں چھوڑیں گے۔ ڈاکٹر مراد راس کا کہنا تھا کہ انہیں سب علم ہے کہ کلرکس کتنی رشوت کھاتے ہیں۔