سابق وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر مجاہد کامران کی درخواست ضمانت پر نیب سے جواب طلب

لاہور(نمائندہ کریئر کاروان) لاہور ہائیکورٹ نے سابق وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر مجاہد کامران کی درخواست ضمانت پر نیب کو نوٹس جاری کر کے جواب مانگ لیا ہے۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے ڈاکٹر مجاہد کامران کی درخواست پر سماعت کی جس میں سابق وائس چانسلر نے اپنی گرفتاری کو چیلنج کیا۔ڈاکٹر مجاہد کامران کے وکیل نے نشاندہی کی کہ درخواست گزار کو تعلیمی خدمات پر حکومتی سطح پر کئی ایوارڈ دیئے گئے لیکن نیب نے انہیں گرفتار کرلیا ہے۔ وکیل نے اعتراض اٹھایا کہ ڈاکٹر مجاہد کامران نیب کی تحقیقات میں شامل رہے اور بے گناہی کے ثبوت بھی دیئے۔ وکیل نے واضح کیا کہ اساتذہ کی بھرتی سنڈیکیٹ کی منظوری اور تمام قانونی تقاضے پورے کرنے کے بعد کی گئی۔ وکیل نے قانونی نکتہ اٹھایا کہ ڈاکٹر مجاہد کامران تفتیش مکمل ہونے پر اب جوڈیشل ریمانڈ پر جیل میں ان کی ضمانت منظور کی جائے۔ درخواست پر مزید کارروائی 7 نومبر کو ہوگی۔