لٹل پروفیسر کے نام سے شہرت یافتہ پاکستانی زیدان حامد کانام ،گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج

 لٹل پروفیسر کے نام سے شہرت یافتہ پاکستانی زیدان حامد  کانام ،گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج
اسلام آباد (کرئیرکاروان) لٹل پروفیسر کے نام سے شہرت یافتہ پاکستانی زیدان حامد  کانام ،گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں درج
۔ پاکستانی زیدان حامد نے کم سے کم وقت میں پیریاڈک ٹیبل کے تمام عناصر کو ترتیب دینے کا ریکارڈ توڑ کر گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں اپنا نام درج کرانے میں کامیاب۔ زیدان حامد نے منگل کو پاکستان سائنس فائونڈیشن میں ایک پروقار تقریب کے دوران پیریاڈک ٹیبل کے تمام 118 عناصر کو 5 منٹ 41 سیکنڈ میں درست ترتیب دے کرگزشتہ ورلڈ ریکارڈ توڑ ڈالا جو کہ 6 منٹ اور 44 سیکنڈ تھا۔ اس موقع پر پاکستان سائنس فائونڈیشن کے آڈیٹوریم میں ریکارڈ کے وقت کا حساب رکھنے والے عملے کے علاوہ کیمسٹری پروفیسرز، سائنسدان، میڈیا اور طلباء کی بڑی تعداد موجود تھی۔ سیکرٹری وفاقی وزارت سائنس و ٹیکنالوجی کیپٹن (ر) نسیم نواز گیسٹ آف آنر تھے۔
 
 
دنیائے کیمسٹری کے اس اچھوتے گینز ریکارڈ کی بنیاد سب سے پہلے ’’پر ڈیو یونیورسٹی‘‘ کے کیمیکل انجینئر پروفیسر ڈاکٹر ولاز پول نے ڈیوڈسن سکول آف کیمسٹری میں رکھی۔
 
اس دلچسپ ریکارڈ میں حصہ لینے والے فرد کو پیریاڈک ٹیبل کے تمام 118 عناصر کو کم سے کم وقت میں ان کی اصل ترتیب میں رکھنا ہوتا ہے۔ ڈاکٹر ولاز نے 15 اگست 2018ء کو ’’فورنی ہال آف کیمیکل انجینئرنگ‘‘ میں 8 منٹ اور 36 سیکنڈ کے دورانیہ میں 118 عناصر کو ترتیب دے کر عالمی ریکارڈ قائم کیا تھا جبکہ لبنان کے علی غدر نے 25 فروری 2019ء کو پیریاڈک ٹیبل کے 150 سال مکمل ہونے پر یہ ریکارڈ 6 منٹ اور 44 سیکنڈ میں توڑ دیا۔
منگل کو زیدان حامد نے پیریاڈک ٹیبل کے تمام 118 عناصر کو 5 منٹ اور 41 سیکنڈ میں درست ترتیب دے کر گذشتہ ریکارڈ توڑ ڈالا اور گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں اپنا نام درج کرا لیا۔ اس موقع پر زیدان حامد نے کہا کہ کیمسٹری میرا بچپن ہے، میں تمام کیمیائی عناصر کو تب یاد کر چکا تھا جب میں تین سال کا تھا اور تب سے اب تک میں ان عناصر کے ساتھ کھیلتا آیا ہوں۔